M ilyas

اس ماہ کے منتخب رکن

سوال: آپ کو اردو لونگ ڈکشنری کا حصہ بننے کے لیے کس چیز نے مائل کیا؟

یہ غالباً 1993 کی بات ہے۔ میں نے انگریزی زبان کے الفاظ کی ادائیگی سیکھی۔ پرونسی ایشن پر ساتھیوں کو اعتراض تھا۔ میرے پاس ایڈوانسڈ لرنرز ڈکشنری تو تھی۔ لیکن اس وقت اس کی سی ڈی دستیاب نہ تھی۔

اسی اثنا میں کمپیوٹر متعارف ہوا۔ مارکیٹ سے اوکسفرڈ ٹاکنگ ڈکشنری ہاتھ لگ گئی۔ اور یار لوگوں کو تشفی ہوئی کہ میری تلفظ کی ادائیگی درست تھی۔ تب سے اب تک اس ڈکشنری کے ساتھ سافٹ ویئر ہو یا کتاب کسی نہ کسی صورت میں تعلق ضرور رہا ہے۔ ایک دن براؤزنگ کرتے کرتے انٹرنیٹ پر اوکسفرڈ اردو لِونگ ڈکشنری نظروں سے گزری۔ اس اردو لغت کوآن لائن پا کر بے حد فرحت محسوس ہوئی۔ اکاؤنٹ بنایا اور الفاظ کو لکھنا شروع کیا۔ اوکسفرڈ کی علمی خدمات کو سلام۔

سوال: آپ کے خیال میں اس سے اردو بولنے والوں کو کس طرح فائدہ پہنچ سکتا ہے؟

ڈکشنری الفاظ و معانی اور مترادفات کا مجموعہ ہوتی ہے۔ زبان ارتقا کے عمل کے باعث اپنے ہی کچھ الفاظ سے ناطہ توڑ کر ناآشنا ہو جاتی ہے۔ اور ان الفاظ اور کہاوتوں پرزمانے کی گرد پڑنے کے باعث زبان سے نکل جانے کا خدشہ لاحق رہتا ہے۔ نیز نئے الفاظ کا شامل ہونا بھی ممکن ہوتا ہے۔ لہٰذا اردو لونگ ڈکشنری کے باعث الفاظ کی آمدورفت سے اہل زبان واقف ہوں گے اور فی زمانہ تبدیلیوں کو یاد بھی رکھیں گے۔ اردو لِونگ ڈکشنری اپنے معیار اور سہولتوں کے سبب اپنے وقت کی ایک عظیم علمی کاوش ہو گی۔ آئی ٹی کی فراہم کردہ آسانیوں کو استعمال کرتے ہوئے اس ڈکشنری کی مدد سے ہم سفر و حضر میں اپنی پسند کے الفاظ و معانی کو تلاش کر سکتے ہیں۔ دنیا کے وہ علاقے جہاں لائبریریاں ہی نہیں یا جن جن علاقوں میں اردو بولی اور سمجھی نہیں جاتی وہاں بھی اردو لونگ ڈکشنرکی مددسے اردو بولنے والے اپنی زبان سے جڑے رہیں گے۔ اور ضخیم کتابوں کی ورق گردانی کیے بغیرکمپیوٹر، ٹیبلٹ یا موبائل فون کے ذریعے اپنے علم میں اضافہ کرتے رہیں گے۔

اس کے علاوہ دولسانی مطالعہ قاری کومعانی واضح کرنے میں ممد و معاون ثابت ہوسکتا ہے۔

کیا آپ کا کوئی پسندیدہ اردو لفظ یا کہاوت ہے ؟ کیوں؟

اللہ تعالیٰ نے انسان کو اشرف المخلوقات و تخلیق احسن تقویم بنایا ۔ اس کو مسجود ملائکہ صرف اس لیے بنایا کہ اس کو علم عطا کیا، اور بولنا سکھایا۔ زبان اللہ کی نشانی ہوتی ہے۔ اردو ایک میٹھی زبان ہے۔ یہ ایک جامع اور آداب سے بھرپور زبان ہے۔ اس میں باغ ، چمن، گلستاں، چمنستان، بوستاں اور باغیچہ کے الفاظ اس کی وسعت دامانی کا منہ بولتا ثبوت ہیں۔ اس کے قاری کو الفاظ کے انتخاب میں تنگیِ داماں کا سامنا نہیں کرنا پڑتا ہے۔ یہ الفاظ جب کسی جملہ یا مصرعے میں لگتے ہیں تو موتیوں کی لڑی بن جاتی ہے۔ جس طرح پھولوں کے گلدستہ سے ایک پھول کا یا ہیروں کی ٹوکری سے ایک ہیرے کا انتخاب مشکل ہوتا ہے۔ اسی طرح کسی ایک لفظ کو منتخب کرنا مشکل ہے۔ یہ الفاظ یا کہاوت جب جذبات کی ترجمانی کرتے ہیں تو رفیق دل بن جاتے ہیں۔ اردو نثر کے ساتھ ساتھ اردو نظم میں بھی تنوع پایا جاتا ہے۔ بقول شاعر

1 ہمدم کے لیے ہم دم سے گئے ہمدم کی قسم ہمدم نہ ملا
مرہم کے لیے مرہم بھی گئے مرہم کی قسم مرہم نہ ملا

2 رنج سے خوگر ہوا انسان تو مٹ جاتا ہے رنج
مشکلیں مجھ پر پڑیں اتنی کہ آساں ہوگئیں

3 زندگانی کی حقیقت کوہ کن کے دل سے پوچھ
جوئے شیرو تیشہ و سنگ گراں ہے زندگی

اردو اس لحاظ سے بڑی زرخیز زبان ہے کہ اس کے محاورات، کہاوتوں کا استعمال شاعری میں بھی بکثرت ہوتا ہے۔ جو زبان کا اعجاز ہے۔

 سوال: ایسی کون سی چیزیں ہیں جنھیں آپ چاہتے ہیں کہ اردو سائٹ /فورم پرشامل کیا جائے؟

اُردو لونگ ڈکشنری میں الفاظ کی آواز کا فیچر شامل ہوجائے تو سونے پر سہاگہ ہو گا، کیوں کہ سپیکنگ ڈکشنری کی مدد سے عام درجے کا قاری منہدی اور مہندی، رحجان اور رجحان کےغلط اور صحیح ہجوں میں تمیز کرسکے گا۔ ایک فیچر تصحیح کا ہو جائے تو بہت خوب رہے گا۔ اگر غلطی سے یا انٹرنیٹ کی خراب سپیڈ سے کوئی لفظ غلط ایڈ ہو جائے تو درستگی سے غلطی کا ازالہ ہو جائے۔

اس کے علاوہ جو بھی اوکسفرڈ سے محبت رکھتا ہے، اور کوئی لفظ اضافہ کرتا ہے تو اس کی حوصلہ افزائی ضرور فرمائیں۔ اردو لونگ دکشنری کے رفیع القدر کام انجام دینے والے حضرات کا اور ادارہ اوکسفرڈ کا شکریہ۔ اللہ کرے یہ ڈکشنری اردو زبان کے بولنے والے حضرات کے لیے سود مند ثابت ہو۔

 اگر ممکن ہوتو اردو لونگ ڈکشنری کی موبائل اپلی کیشن کی بھی تائید کرتا ہوں۔

OxfordWords بلاگ اور تبصروں میں موجود خیالات اور دوسری معلومات لازمی طور پر اوکسفرڈ یونیورسٹی پریس کے خیالات یا موقف کی ترجمانی نہیں کرتے۔

اوکسفرڈ کی زیرِ نگرانی